رانا ثنا اللہ نے عمران خان کو’شیطان‘ اور سراج الحق کو ’مکار مولوی‘ قرار دیدیا…کون کس کو دباو میں لانا چاہتا ہے ….رانا ثناءاللہ نے بتا دیا

لاہور(ڈیلی خبر)وزیرقانون پنجاب رانا ثناء اللہ نے کہا ہے کہ عمران خان،راولپنڈی کاشیطان اورمکارمولوی جے آئی ٹی کودباؤ میں لاناچاہتے ہیں،اختلافی نوٹ کو سپریم کورٹ کا فیصلہ بنانے کی کوشش توہین عدالت ہیں،عمران خان اور2دیگرجے آئی ٹی کودباؤ میں لاناچاہتے ہیں۔تفصیلات کے مطابق وزیرقانون رانا ثناء اللہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان،شیخ رشید اور سراج الحق کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ایک طرف شیطان اور دوسری طرف مکار مولوی ہیں جو کہ جے آئی ٹی کو پر اثر انداز ہونا چاہتے ہیں ان کاآئی ٹی پر اثر انداز نہ ہونے کو یقینی بنایا جائے گا۔رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ عمران خان کے سوشل میڈیا پر پیغام سے سازش واضح ہوجاتی ہے،لاتوں کے بھوت باتوں سے نہیں مانتے، اختلافی نوٹ کوسپریم کورٹ کافیصلہ ثابت کرنیکی کوشش کی جا رہی ہے اور امید ہے کہ سپریم کورٹ منفی ہتھکنڈوں کا مکمل نوٹس لے گی۔وزیرقانون کا مزید کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کا فیصلہ ہی فیصلہ ہوتا ہے،اطالوی ناول کو آسمانی صحیفہ ثابت کرنے کی کوشش کر رہے ہیں، یہودی ٹولہ اس معاشرے میں نفرت کا بیج بونا چاہتا ہے، تحریک انصاف پہلے سپریم کورٹ کودباؤ میں لانے کی کوشش کرتی رہی ہے،جے آئی ٹی میرٹ پرکام کرکے حقائق قوم کے سامنے لائے،مگر یہ لوگ چاہتے ہیں جے آئی ٹی میرٹ پر کام نہ کرسکے۔رانا ثناء اللہ کا آخر میں کہنا تھا کہ کرپشن کیخلاف آصف زرداری کی مہم قیامت کی نشانی ہے، اعتزاز احسن ہمیشہ سے انتہائی منافق اور ذہانت فروش انسان ہیں