پیپلز پارٹی کے وجعد کو سندھ میں تسلیم کرنا ہوگا: شاہ محمود قریشی

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) ایک طرف تو شاہ محمود قریشی یہ کہتے ہیں کہ پی ٹی آئی چھوڑ کر کسی دوسری سیاسی جماعت میں شمولیت کی خبریں بے بنیاد ہیں اور تحریک انصاف چھوڑ کر کہیں بھی نہیں جا رہے لیکن ساتھ ہی شاہ محمود قریشی کو پیپلز پارٹی سے وابتہں یادیں پھر سے ستانے لگی ہیں اور انہوں نے ایسی بات کہہ دی ہے کہ تحریک انصاف چھوڑنے کی خبروں کی انکی تردید نے ایک بار پھر بہت سےشکوک و شبہات پیدا کر دیےہیں۔تفصیلات کے مطابق کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاید شاہ محمود قریشی یہ بات بھول گئے کہ وہ پاکستان تحریک انصاف کے رہنماء ہیں اور پی ٹی آئی نے ان پر کافی نوازشات کر رکھی ہیں ۔شاہ محمود قریشی کو اپنا پرانا دور اس قدر یاد آیا کہ وہ پیپلز پارٹی کی شریک چیئرمین کے ایک بار پھر گُن گانے لگے۔ انکا کہنا تھا کہ تمام جماعتوں کو پیپلزپارٹی کے سندھ میں وجود کوماننا ہوگا اور تسلیم کرنا ہوگا کیونکہ پیپلز پارٹی سندھ میں حکمران جماعت بھی ہے اور سندھ کے لوگوں کو دلوں پر راج بھی یہ ہی کرتی ہے۔ انکا کہا تھا کہ زرداری صاحب اپنی جانب مائل کرنے کے فن میں مہارت رکھتے ہیں، سیاسی جوڑ توڑ کرنا ہر جماعت کا حق ہے اس لیے صرف سیاسی جوڑ توڑ کرنے پر زرداری صاحب کو تنقید کا نشانہ نہیں بنایا جا سکتا.