وزیر اعظم صادق اور امین نہیں وہ جے آئی ٹی کی شفاف تحقیقات میں رکاوٹ ہیں : افتخار چوہدری

اسلام آباد(ڈیلی خبر)سابق چیف جسٹس آف پاکستان افتخار چوہدری نے کہا ہے کہ جوشخص صادق وامین کی تعریف پرپورانہیں اترتاوہ آزادانہ تحقیقات کیسے کرنے دے گا۔وزیر اعظم جے آئی ٹی کی آزادانہ تحقیقات میں سب سے بڑ ی رکاوٹ ہیں۔اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کے 5فاضل جج صاحبان نے بڑا زبردست فیصلہ کیا۔ سپریم کورٹ کے کسی جج نے بھی نوازشریف کے حق میں فیصلہ نہیں دیا۔ وزیراعظم سپریم کورٹ کے فیصلے کے تحت مستعفی ہوجائیں۔ہم چاہتے ہیں کہ انصاف ہوتا ہوا بھی نظر آئے۔
’یہ لڑکی ایسے نہیں آئی، پانچ ہزار درہم دیئے ہیں۔ ۔۔ ‘ پاکستانی شہری کی شرمناک ویڈیو سے سوشل میڈیا پر طوفان آگیا
افتخار چوہدری نے وزیر اعظم کے حوالے سے کہا کہ نوازشریف کا بہت اثرو رسوخ ہے، ان کی صوبوں میں بھی حکومت ہے، اصغرخان کیس کا حشر آپ سب کے سامنے ہے، وزیر اعظم پاکستان اپنے اثر ورسوخ کی بنیاد پر جے آئی ٹی کی تحقیقات پر اثر انداز ہوسکتے ہیں۔ ایسا نہیں ہونا چاہیے کہ جے آئی ٹی وزیراعظم کے پاس جائے، پاناما کیس میں انصاف ہوتا ہوا نظر آنا چاہیے۔