اگر آپ کے چہرے پر کیل مہاسے نکلتے ہیں تو کوئی کریم لگانے سے قبل اس آسان ترین مشورے پر عمل کریں

لندن(نیوزڈیسک)دنیا بھر میں نوجوان لڑکے لڑکیوں کو چہرے پر بننے والے کیل مہاسے کافی پریشان کرتے ہیں اور اس کے علاج کے لئے وہ کئی طرح کی کریمیں لگاتے ہیں لیکن اس کا فائدہ کچھ دیر کے لئے ہوتا ہے اور بعد میں پھر مسئلہ سر اٹھاتا ہے۔ماہرین صحت کے نزدیک یہ مسئلہ ہماری غذاﺅں کی وجہ سے پیدا ہوتا ہے اور ایسا ہی کچھ اس نوجوان لڑکی کے ساتھ بھی تھا لیکن اس نے کریم لگانے کی بجائے اپنی اس مشکل کا حل غذا میں تلاش کیا۔تفصیلات کے مطابق 22سالہ برطانوی شہری ریچیل کرالی کو کیل مہاسوں کا مسئلہ 16سال کی عمر سے درپیش تھا۔اس کا کہنا ہے کہ یہ مسئلہ اس قدر سنگین ہوگیا کہ لوگ اسے ’بیمار چہرہ‘ کہنے لگے جس سے وہ کافی زیادہ پریشان رہنے لگی۔ ”مہاسوں کی وجہ سے میرااعتماد تباہ ہوچکا تھا، لوگ میرے چہرے کی طرف کراہت سے دیکھتے تھے “۔اس کا کہنا ہے کہ 18سال کی عمر میں اسے ایک بیوٹی مقابلے میں موقع ملا لیکن اپنے چہرے کی وجہ سے اس نے انکا رکردیا۔اس کا کہنا ہے کہ وہ بہت زیادہ دلبرداشتہ ہوچکی تھی لیکن پھر اس نے اپنی زندگی کا بڑا فیصلہ کیااور کھانے میں تبدیلی کی۔”میں نے اپنے کھانوںسے ڈیری مصنوعات، چینی، گلوٹین اور گوشت نکال دیااور صرف سبزیوں اور پھلوں پر گزارا کرنے لگی۔“ریچیل کا کہنا ہے کہ صرف سبزیاں کھانے سے اس کے چہرے پرشادابی لوٹ آئی اور اب وہ ایک پراعتماد لڑکی بن چکی ہے۔ اس کا کہنا ہے کہ اگر نوجوان لڑکے اور لڑکیاں اپنے کھانوں سے ڈیری مصنوعات نکال دیں تووہ بھی کیل مہاسوںکے مسائل سے بچ سکتے ہیں۔ ”چکنائی اور چینی کو اپنے کھانوں سے نکال کر آپ کا چہرہ صاف ہونے کے ساتھ ذہنی تناﺅ بھی کم ہوگا۔“