”اپنے ملک میں مسلمانوں کو آنے دو تو یہی ہوتا ہے۔۔۔“ مانچسٹر دھماکے پر ایک شخص نے مسلمانوں کو نشانہ بنانے کی کوشش کی تو برطانوی لڑکی نے منہ توڑ جواب دیدیا، دھماکے کے بعد پیش آنے والا ایسا واقعہ بتا دیاکہ مسلمانوں کے دل جیت لئے

لندن (ڈیلی خبر) انگلینڈ کے شہر مانچسٹر میں آریانا گرینڈے کے کنسٹرٹ میں ہونے والے دھماکے سے 22 افراد ہلاک اور 59 زخمی ہوئے جبکہ حملہ آور کی شناخت سلمان بیدی کے نام سے ہوئی ہے۔ابھی حملہ آور کا نام اور شناخت سامنے نہ آئی تھی کہ ایک برطانوی شخص نے اس دھماکے کی ذمہ داری بھی تمام مسلمانوں کے سر ڈالنے کی کوشش کی گئی مگر اس کی ہم وطن لڑکی نے ہی دھماکے کے بعد پیش آنے والا واقعہ سنا کر اس کا منہ بند کر دیا اور مسلمانوں کے دل جیت لئے۔
اس کنسرٹ میں شریک ہونے والی ایک لڑکی پوری رات ایرینا سے ٹویٹس کرتی رہی اور جب دھماکہ ہوا تو اس کے بعد رات ایک بج کر 37 منٹ پر اس نے ٹویٹ کیا ”مجھے یقین نہیں آ رہا، میں بہت دکھی ہوں۔ میں ان تمام خاندانوں سے دکھ کا اظہار کرتی ہوں جن کے پیارے اس دھماکے میں جان سے گئے اور وہ جو زخمی ہوئے۔“لڑکی کے پیغام پر ’ایجنٹ رچرڈ گل‘ نامی ایک شخص نے جواب دیتے ہوئے لکھا ”جب تم اپنے ملک میں مسلمانوں کو آنے کی اجازت دیتا ہو تو پھر یہی ہوتا ہے۔“
لڑکی نے فوراً اس شخص کو جواب دینے کا فیصلہ کیا اور دھماکے کے بعد اپنے ساتھ پیش آنے والا واقعہ سناتے ہوئے لکھا ”وہ ایک مسلمان تھا جس نے ہمیں اپنی ٹیکسی میں بٹھایا اور بحفاظت گھر پہنچایا۔ وہ بہت ہی شفیق آدمی تھا جو خود بھی ڈرا ہوا تھا مگر دوسروں کی مدد کر رہا تھا۔“دنیا میں ایسے لوگوں کی کوئی کمی نہیں جو اس طرح کے دل دہلا دینے والے واقعات پر بھی سیاست کرنے کی کوشش کرتے ہیں مگر مذکورہ شخص کی یہ کوشش بری طرح ناکام ہو گئی اور اس کی ہم وطن لڑکی نے ہی اس کا منہ بند کر دیا۔