زینب کی لاش جس جگہ سے ملی اس سے کتنے فاصلے پر اسے زیادتی کا نشانہ بنایا گیا؟ گرفتار افراد نے تہلکہ خیز انکشاف کر دیا، مکان پر چھاپہ مارا تو پولیس والوں کے پیروں تلے بھی زمین نکل گئی

قصور (ڈیلی خبر) معصوم زینب کے قتل کیس میں اہم پیش رفت ہوئی ہے اور پولیس کے مطابق 2 مشکوک افراد کو حراست میں لے لیا گیا ہے جنہوں نے اس سارے واقعے میں سہولت کار کا کردار ادا کیا۔ ہوشربا انکشاف یہ ہوا ہے کہ یہ لوگ جس مکان میں رہتے تھے، وہاں سے چند قدم کے فاصلے پر زینب کی لاش ملی تھی۔

نجی ٹی وی اے آر وائی نیوز کے مطابق ”زینب کی لاش ملنے کے مقام سے چند قدم کے فاصلے پر واقعہ مکان محمد رانجھا کا ہے جسے بابا رانجھا بھی کہا جاتا ہے۔ اہم بات یہ ہے کہ یہ مکان اس جگہ پر ہے جہاں سے بچی کی لاش ملی تھی۔ پولیس نے بھٹہ چوک سے گرفتار ہونے والے عمر کی نشاندہی پر پہلے آصف نامی شخص کو گرفتار کیا اور پھر بابا رانجھا کو بھی گرفتار کر لیا گیا۔