اچانک ان فٹ قرار دیے جانے پرعمر اکمل کا دبے لفظوں میں احتجاج

برمنگھم:(ڈیلی خبر) عمر اکمل نے اچانک ان فٹ قرار دیے جانے پر دبے لفظوں میں احتجاج ریکارڈ کرا دیا۔ایک انٹرویو میں عمر اکمل نے کہا کہ پاکستان میں انضمام الحق، مشتاق احمد اور ٹرینر صبور نے میرا فٹنس ٹیسٹ لیا تھا تو کیا ان کے ساتھ سیاست ہورہی ہے؟ انھوں نے کہا کہ میں پی سی بی کے سینٹرل کنٹریکٹ میں ہوں،دلوں کا حال تو اوپر والا ہی جانتا ہے،میرا کام پاکستان کیلیے کھیلنا اور بہترین پرفارم کرنا ہے،جس کیلیے دل و جان سے کوشش کروں گا۔علاوہ ازیں اپنی جگہ چیمپئنز ٹرافی اسکواڈ میں شامل کیے جانے والے حارث سہیل کیلیے نیک خواہشات کا اظہار کرتے ہوئے عمر اکمل نے کہا کہ میں اسکواڈ میں ہوں یا نہیں خواہش ہے ہماری ٹیم ہر میچ جیتے۔ عمر اکمل نے چیف سلیکٹر انضمام الحق کا شکریہ ادا کیا اور اپنے پرستاروں سے معافی مانگتے ہوئے کہا کہ جلد ٹیم میں واپسی ہوگی۔ انھوں نے تسلیم کیا کہ کھلاڑی کے کیریئر میں اتار چڑھاؤ آتے ہیں۔یونس خان کی مثال دیتے ہوئے عمر نے کہا کہ ان سے بہت کچھ سیکھا اور یہی وجہ ہے کہ وہ میرے رول ماڈل ہیں۔