”مراد سعید کو میں نے بلایا تھا عابد شیر علی نے اپنا جوتا۔۔۔“ بجٹ تقریر کے دوران پارلیمینٹ میں دراصل کیا ہوا تھا؟ شیریں مزاری میدان میں آ گئیں، ایسی بات کہہ دی کہ ہر پاکستانی دنگ رہ جائے گا

اسلام آباد (ڈیلی خبر) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) رہنماءشیریں مزاری نے کہا ہے کہ پارلیمینٹ میں جب عابد شیر علی وغیرہ نے ان کا گھیراﺅ کیا تو پھر انہوں نے مراد سعید کو بلایا جس پر عابد شیر علی نے ناصرف گالم گلوچ کی بلکہ اپنی جوتی بھی اتار لی تھی۔
نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے شیریں مزاری نے کہا کہ ”پارلیمینٹ میں جھگڑے سے متعلق جو کچھ بھی کہا جا رہا ہے وہ بالکل غلط ہے۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) نے 2012ءمیں پاکستان پیپلز پارٹی کے منتخب وزیر خزانہ پر چوڑیاں پھینکی تھیں اور احسن اقبال نے تقریر کے دوران روٹی پیش کر کے ڈسٹرب کرنے کی کوشش کی تھی۔ہم نے مفتاح اسماعیل کا مائیک بند کرنے کی کوشش نہیں کی اور مائیک کو ہاتھ نہیں لگایا بلکہ ہم صرف دباﺅ ڈالنا چاہ رہے تھے کہ یہ ایک سال کا بجٹ غیر اصولی ہے اور ایک غیر منتخب آدمی کو اسمبلی میں لا کر بجٹ پیش کروانا بھی غلط ہے۔ہم تقریر روکنا چاہ رہے تھے کہ عابد شیر علی نے گھیراﺅ کر لیا جس پر میں نے مراد سعید کو بلایا۔ مراد سعید آیا تو عابد شیر علی نے ناصرف گالم گلوچ کی بلکہ اپنا جوتا بھی اتار لیا۔ اب اس پر اگر ایک غیرت مند آدمی ردعمل نہ دیتا تو پھر کیا کرتا؟“