پاکستان کے پہلے یہودی شہری کو گرین پاسپورٹ مل گیا: مقامی اخبار نےد عویٰ کردیا

اسلام آباد (ویب ڈیسک) مقامی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان کے پہلے یہودی شہری کو گرین پاسپورٹ مل گیا،فیصل بن خالد نے اپنی خواہش کا اظہار کیا ہے کہ میں پاکستانی ہوں لیکن یہودی ہوں ،مجھے پاکستانی پاسپورٹ پر یروشلم جانے کی اجازت دی جائے۔
روزنامہ خبریں کے مطابق فیصل بن خالد پاکستان میں رہائش پذیر یہودی ہیں۔جو اپنے ملک میں رہتے ہوئے پاکستان میں بسنے والے یہودیوں اور دیگر اقلیتوں کے حقوق کے لیے جدوجہد کرنے کے داعی ہیں۔بینخلد وہ پہلے یہودی ہیں جنہیں پاکستانی پاسپورٹ دیا گیا ہے کیونکہ وہ پاکستان کے شہری ہیں۔پاکستانی پاسپورٹ حاصل کرنے کے بعد فیشل بینخلد نے پاکستانی حکومت سے اپنی بڑی خواہش کا اظہار کردیا۔
اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ فیصل بن خالد نے مطالبہ کیا ہے کہ اسے پاکستانی پاسپورٹ پر اسرائیل جانے کی اجازت دی جائے۔اس حوالے سے انہوں نے اپنے لکھے ہوئے ایک آرٹیکل میں لکھا کہ پاکستان کے آئین کے مطابق پاکستان کے تمام شہریوں کو حق حاصل ہے کہ وہ اپنے مذہبی فرائض حتیٰ کے مقدس زیارات کو مکمل آزادی سے ادا کرسکیں۔انکا کہنا تھا کہ ایک ریاست اپنے شہریوں بالخصوص یہودیوں ،عیسائیوں اور حتیٰ کہ مسلمانوں کو بھی بیت المقدس جانے سے کیسے روک سکتی ہے۔